آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس نے موجودہ بجٹ کا خیرمقدم کیا

ایمس یونانی غازی آباد کے تعمیراتی و ترقیاتی کاموں میں تیزی لانے کی اُمید ظاہر کی
نئی دہلی، یکم فروری:آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس نے مرکزی حکومت کے ذریعہ پیش کیے گئے عام بجٹ پر ردّعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ بجٹ 2018 میں مرکزی حکومت نے محکمہ آیوش کو تقریباً ایک سو پانچ کروڑ مختص کیا ہے جو یقیناًقابل ستائش ہے۔ آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس کے اعزازی سکریٹری جنرل ڈاکٹر سیّد احمد خاں نے کہا کہ مرکزی حکومت کی کیبنٹ نے فروری 2014 میں ایمس یونانی غازی آباد کے قیام کو منظوری دی تھی، مگر اس کے تسلی بخش تعمیراتی و ترقیاتی کاموں میں رکاوٹ آئی، غالباً بجٹ میں کمی رہی ہو لیکن اس وقت جو بجٹ ملا ہے اس سے اُمید کی جاتی ہے کہ طب یونانی کے فروغ میں خاص طور سے ایمس یونانی غازی آباد کے ترقیاتی کاموں میں تیزی آئے گی اور موجودہ حکومت یونانی طریقہ علاج کی ترقی کے لیے وسعت قلبی کا مظاہرہ کرے گی۔