راہل نے بی جے پی پر لگایا آئین پر حملہ کرنے کا الزام

نئی دہلی ،28؍دسمبر: کانگریس صدر راہل گاندھی نے مرکز میں حکمران بی جے پی پر آئین پر حملے کرنے اور سیاسی فوائد کے لئے جھوٹ بولنے کا الزام لگایا۔انہوں نے دعوی کیا کہ کانگریس آئین اور ہر ہندوستانی کے حقوق کی حفاظت کے لئے لڑتی رہے گی۔کانگریس کے یوم تاسیس کے موقع پر منعقد پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے راہل نے یہاں کہاکہ کانگریس پارٹی کی شاندار تاریخ ہے اور یہ ایک صدی سے زیادہ عرصے سے لوگوں کی بھلائی کے لئے کام کر رہی ہے۔کانگریس نے اپنے ہم وطنوں کی مدد سے بہت کامیابیاں حاصل کی ہیں۔انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی کا مرکزی خیال سچ ہے۔ہم سچ کو قبول کرتے ہیں۔ہم سچ کے لئے کام کرتے ہیں۔ہم حق کے لئے جدوجہد کرتے ہیں۔اگر ہم اپنے ملک کی تاریخ دیکھیں تو ایک اہم دن وہ تھا جب ہمیں آئین ملا۔اسی دن ہم نے یہ طے کیا تھا کہ ذات، نسل، مذہب کا امتیاز کئے بغیر ہر شخص کے مساوی حقوق حاصل ہوں گے۔مستقبل بنانے کی یکساں صلاحیت ہوگی۔انہوں نے کہا کہ آج یہ دیکھ کر پریشانی ہوتی ہے کہ ہمارے ملک کی بنیاد جو دستاویزات (آئین) ہے، جسے کانگریس پارٹی اور ڈاکٹر امبیڈکر نے دیا تھا اس پر حملہ کیا جا رہا ہے۔اس پر براہ راست حملہ کیا جا رہا ہے۔بی جے پی کے سینئر ارکان کی طرف سے بیان دیا جا رہا ہے۔اس پر پیچھے سے حملہ کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ کانگریس اور ہر ہندوستانی کا فرض ہے کہ آئین اور ہر ہندوستانی کے حقوق کی حفاظت کی جائے۔ہر شخص کے مستقبل کی حفاظت کی جائے۔لہذا کانگریس ہمیشہ سچ کی حفاظت، حق کو قبول کرنے، گرچہ وہ ماضی کے بارے میں ہو یا حال کے بارے میں ہو اور حق کے مطابق برتاؤ کرنے کے لئے اپنے آپ کو پیش کرتی ہے۔راہل نے ملک کے موجودہ صورتحال کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ ہمارے ملک میں آج کل فراڈ کا جال بچھایاجا رہا ہے اور بی جے پی اسی مشن پر کام کر رہی ہے اور سیاسی فوائد کے لئے جھوٹ کا استعمال کررہی ہے۔یہی ہمارے اوربی جے پی کے درمیان فرق ہے۔ہم پریشان ہو سکتے ،ہو سکتا ہے کہ ہم بہتر نہ کریں، ہم شکست بھی کھاجائیں، لیکن ہم سچ کا ساتھ نہیں چھوڑیں گے۔ہم سچ کی حفاظت کریں گے۔