قرآنی تعلیم سبھی تعلیمات سے افضل تر! مولانا یعقوب

سہارنپور ؍ آ منا سامنا میڈیا (احمد رضا) آج نماز جمعہ سے قبل ایک خصوصٰی بیان میں مسلم اسکالر اور جامعۃالطیبات کے ناظم اعلیٰ اور عالم دین مولانامحمدیعقوب بلندشہری نے کہاکہ آج مسلمان حق تعالیٰ کے احکامات اور اس کے رسولؐ کی تعلیمات سے دورہوتاجارہاہے جوں جوں ملی تنظیمیں،دینی مدارس اور تبلیغی جماعتیں معاشرہ کو سدھارنے کاکام تیزی سے کررہی ہیں ویسی ہی معاشرہ سدھرنیکے بجائے اور بگڑتاجارہاہے مسلم اسکالر گزشتہ دوماہ سے لگاتار غیر ممالک کے سفر میں رہتے ہوئے بھی لگاتار اقوام کی ترقی اور بہتری کیلئے جدوجہد میں مصروف ہیں آج اپنے پیغام میں دینی مدارس بورڈ کے سربراہ مولانا یعقوب بلند شہرینے کہاکہ اگرمسلمانوں کا یہی حال رہاتو آنے والے وقت میں مسلمانوں کو مرتدہونے سے کوئی نہیں روک سکے گا انہوں نے کہاکہ آج ہرطرف مسلمانوں اور مذہب اسلام پر حملے کئے جارہے ہیں مسلمانوں کو حراساں کیاجارہاہے اس کے باوجودبھی ہم اپنی اصلاح نہیں کرپارہے ہیں مولانابلندشہری نے کہاکہ دنیاملعون ہے ہمیں دنیاکے پیچھے نہیں بھاگنا چاہئے بلکہ دنیاسے بے رغبتی پیداکرکے حق تعالیٰ کی عبادت میں لگ جاناچاہئے انہوں نے کہاکہ ہماری اصل منزل آخرت ہے اگر ہم نے مرنے سے پہلے آخرت کی تیاری نہ کی تو آخرت میں ہمیں بڑی سزاؤں کا سامناکرنا پڑے گا انہوں نے کہاکہ عبادتیں دو طرح کی ہیں ایک جانی عبادت ایک مالی عبادت ہماری جان بھی اللہ کی اور ہمارامال بھی اللہ کا اسلئے ہمیں اپنی جان اور اپنا مال اللہ کے رضاکے لئے لگانا چاہئے انہوں نے کہاکہ قرآن کریم ہی ہمارا اصل ہماراپرسنل لا اور قانون حیات ہے اسلئے ہمیں قرآن کریم کے احکامات پر چلنے اور اس کوسمجھ کر پڑھنے اور اس پر عمل کرنے کی کوشش کرنی چاہئے مولانابلندشہری نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ آج کے دور میں ہماری جانیں اور مال بیجاصرف ہورہاہے کیوں کہ ہمارے بچے دینی تعلیم سے محروم ہوتے جارہے ہیں غیروں کے اسکول و کالج میں تعلیم حاصل کرنے والی قوم کی بچیاں اکثر دینی تعلیم سے محروم رہ جاتی ہیں جو معاشرہ کو سدھارنے کے بجائے اور بگاڑنے کا سبب بنتی ہیں،مولانابلندشہری نے کہاکہہم روزانہ مسجد در مسجد اور گھر گھر جاکراصلاح معاشرہ اور تعلیمی بیداری پروگرام چلارہے ہیں اورہمارے مدارس کی معلمات وطالبات بھی روزانہ کسی نہ کسی علاقہ میں اصلاح معاشرہ اورتعلیمی بیداری پروگرام کرتی ہیں تاکہ معاشرہ دینی تعلیم سے روشن ہوسکے گذشتہ دنوں نئی مسجد محلہ چھپیان،بڑی مسجد آلی اہنگران،روبینہ مسجد چاندکالونی،مسجد عطاء اللہ شاہ سرائے مردان علی،رحمت مسجد آزادکالونی،مسجد سلمان فارسی ۶۲ٖفٹ روڈ،مسجد ٹھیکیدار والی پکاباغ وغیرہ کی اہم مساجد میں دینی مجلسوں کے علاوہ بھی اضلاع کے بیشتر علاقوں میں دینی تربیتی پروگراموں کا سلسلہ لگاتار جاری ہے ہمیں دین کے معاملات کو سہی طور سے عوام کی رہبری کیلئے انکے سامنے رکھنا ہوگا تبھی قوم کا سدھار ممکن ہے!