راہل کا حملہ،نتیش دھوکہ باز، نتیش کا جوابی حملہ ،وقت آنے پر سب کو جواب دوں گا گورنرنے آئین اورسپریم کورٹ کے حکم کی خلاف ورزی کی:دگ وجے سنگھ

نئی دہلی،27جولائی:کانگریس نائب صدر راہل گاندھی نے نتیش کمار کے بی جے پی کی حکومت بنانے پر بڑا بیان دیا ہے۔راہل گاندھی نے کہا کہ نتیش کمار مجھ سے ملے تھے، انہوں نے دھوکہ دیا ہے۔اس پر نتیش کمار نے راہل گاندھی کے الزام پر جوابی حملہ کیا ہے۔نتیش کمار نے کہا کہ وہ وقت آنے پر سب کو اچھے سے جواب دیں گے۔نتیش نے کہا کہ ہم لوگوں نے بہار کے لوگوں کے مفاد میں فیصلہ لیا ہے۔راہل گاندھی نے نتیش پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا تھا کہ 3-4ماہ سے ہمیں پتہ تھا کہ اس طرح کی پلاننگ ہو رہی تھی، اپنے مفاد کے لئے شخص کچھ بھی کر رہا ہے، کوئی قانون نہیں ہے،اقتدار کے لئے کوئی کچھ بھی کر رہا ہے۔غور طلب ہے کہ تیجسوی یادو پر مسلسل لگ رہے الزامات کے درمیان نتیش نے راہل گاندھی سے ملاقات کی تھی۔حال ہی میں سابق صدر پرنب مکھرجی کے اعزاز میں وزیر اعظم مودی کی طرف سے منعقد ڈنر میں شامل ہونے سے پہلے سنیچر کو نتیش نے کانگریس نائب صدر راہل گاندھی سے ملاقات کی تھی،دونوں میں بہار کی سیاست اور مہاگٹھ بندھن کے مستقبل پر بات چیت ہوئی۔مہاگٹھ بندھن میں دراڑ کے درمیان نتیش کی راہل سے اس ملاقات پر سب کی نظر تھی،دونوں کے درمیان تقریبا 40منٹ تک بات چیت ہوئی۔وہیں کانگریس کے جنرل سکریٹری دگ وجے سنگھ نے بھی ٹویٹ کیا کہ ایک بار پھر سے بہار میں گورنر نے سرکاریا کمیشن اور سپریم کورٹ کے احکامات کی خلاف ورزی کی ہے۔سب سے بڑی پارٹی آر جے ڈی کو موقع نہیں دیا گیا ہے۔دگ وجے سنگھ نے کہاکہ بی جے پی کو جمہوریت میں یقین نہ پہلے تھا نہ اب ہے۔