نئے چاند کی عمر کتنی ہوتی ہے ؟؟

سورج اور چاند کے ایک سیدھ میں آجانے کا وقت ولادت قمر یا اجتماع شمس و قمر کہلاتا ہے
اور اس حالت کو ’’حالت محاق‘‘ کہا جاتا ہے ۔
ولادت قمر کے بعد گزرنے والا وقت ’’چاند کی عمر‘‘ کہلاتا ہے
عین ولادت کے وقت چاند کی عمر صفر ہوتی ہے ۔
ولادت قمر کے وقت چاند کا جو نصف تاریک حصہ زمین کی طرف پوتا ہے ہمیشہ وہی حصہ زمین کی طرف رہتا ہے اسی تاریک حصے پر جیسے جیسے سورج کی روشنی زیادہ پڑتی جاتی ہے ویسے ویسیے چاند کی ہلالی شکل بڑھتی جاتی ہے ۔
محاق کی حالت کے بعد چاند مشرق کی جانب تھورا ہٹتا ہے تو ہمیں اس کا چمکتا ہوا کنارہ نظر آتا ہے وہی کنارہ ’’ہلال‘‘ کہلاتا ہے۔
اس بارے میں ماہرین فلکیات کا اختلاف ہے کے ولادت کے بعد چاند کی سورج سے کتنے درجے کی دوری پر چاند نظر آنے کے قابل ہوتا ہے ؟
اس بارے میں چار مشہور اقوال ہیں :
8 درجے
10 درجے
12 درجے
13 درجے
اگر ہم 12 درجے کا قول لیں تو ماہرین کی تصریح کے مطابق جب مہینے کے آخر میں چاند کا سورج کے مغربی جانب فاصلہ 12 درجے یا اس سے کم درجے رہ جائے تو چاند نظر نہیں آتا پھر جب چاند سورج کے سامنے آجاتا ہے تو اس کا درجہ صفر رہ جاتا ہے اور پھر چاند مشرقی جانب بڑھنا شروع کرتا ہے تو 12 درجے کے بعد نظر آنے کے قابل ہوتا ہے ۔ اور آپ کو یہ معلوم ہونا چاہئے کہ چاند دو گھنٹے میں ایک درجہ طے کرتا ہے اس حساب سے 12 درجے کے قول کے مطابق مہینے میں تقریباً 48 گھنٹوں کا وقفہ ایسا ہوتا ہے جس میں چاند نظر نہیں آتا پھر چاند کی سورج سے مشرقی جانب دوری اقوال کی ترتیب کے مطابق 8 درجے ، 10 درجے، 12 درجے یا 13 درجے ہوجاتی ہے تو وہ نظر آنے کے قابل ہوجاتا ہے ۔ اس تمام تفصیل سے آپ یہ سمجھ گئے ہوں گے کہ چاند کی ولادت کے بعد عمر اقوال کی ترتیب کے مطابق 16 گھنٹے، 20 گھنٹے یا 24 گھنٹے یا 26 گھنٹے ہو تو چاند نظر آئے گا چاند کی عمر زیادہ سے زیادہ 26 گھٹے ہوتو وہ نظر آنے کے قابل ہوگا واضح رہے کہ 13 درجے سے زائد کا قول کسی بھی ماہر فلکیات کے نزدیک نہیں ہے ۔
تصویر میں 12 درجے کے مطابق نقشہ بنایا گیا ہے ۔ کیوں کہ 12 درجے (24 گھنٹے) کا قول مناسب معلوم ہوتا ہے ۔
(حوالہ : تفہیم الفلکیات ، صفحہ 140)
نوٹ : واضح رہے کھلی آنکھ سے چاند نظر آنے کے لئے صرف چاند کی عمر کا اعتبار کرنا ٹھیک نہیں دوسرے بھی عوامل ہیں جن کا پایا جانا ضروری ہے ۔ کھلی آنکھ سے چاند نظر آنے کے لئے چاند کی عمر کے ساتھ ساتھ اسکی بلندی(ارتفاع Altitude) ،مطلع کی صورت حال ، lagtime چاند اور سورج کے غروب ہونے کا درمیانی وقفہ ،Phase of Moon یعنی چاند کا کتنا روشن حصہ ہماری جانب ہے ؟؟ ، چاند کی موٹائی ، چاند اور سورج کے السمت Azimuth  میں فرق جسے Realtive Azimuth کہاجاتا ہے اور چاند اور سورج کا زاویائی فرق Elongation بھی دیکھا جاتا ہے چنانچہ چاند نظر آنے کے لئے اس کی افق سے بلندی کم سے کم 10 درجے ہونی چاہئے اور اگر 8 یا 9 درجے کا چاند ہوتو مطلع بلکل صاف و شفاف ہونا چاہئے.