قدآور لیڈر اور سابق مرکزى وزیر،قاضى رشید مسعود کی رحلت پر آل انڈیا ملى کونسل کے قومی صدر مولانا محمد عبداللہ مغیثی صاحب کى جانب سے خراج عقیدت و تعزیتى پیغام

*قدآور لیڈر اور سابق مرکزى وزیر،قاضى رشید مسعود کی رحلت پر آل انڈیا ملى کونسل کے قومی صدر مولانا محمد عبداللہ مغیثی صاحب کى جانب سے خراج عقیدت و تعزیتى پیغام۔*

قاضى رشید مسعود کی رحلت کی خبر سے پورے ملک میں رنج و الم کی لہر دوڑ گئی،یقینا آج ملک ایک عظیم سیاسى لیڈر اور رہنما سے محروم ہوگیا،
وہ ایک بڑے رہنما اور قد آور انسان تھے،قوم کے لۓ ان کی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جاۓگا ، ان خیالات کا اظہار آج مولانا حکیم عبداللہ مغیثى صاحب نے کیا،انھوں مزید فرمایا کہ قاضى صاحب سے انکا بہت قریبى و خاندانى تعلق رہا ہے اسى لۓ قاضى صاحب کى رحلت انکے لۓ ایک ذاتى حادثہ ہے،

انھوں نے ہندوستان کی کثیر جہتی روایتوں کو ہمیشہ ملحوظ رکھا وہ ایک پختہ قوم پرست تھے ان کو سبھی طبقات کااحترام حاصل تھا وہ زندگی بھر فرقہ پرستی سے لڑتے رہے اور سیکولر اقدار کی حفاظت اور انکی تشہیر کے لئے زندگی بھر کوشاں رہے ، مرحوم ہمیشہ ہندومسلم ایکتا کے علمبردار رہے،تمام عمر ملکى و ملى مفاد کے خاطر تمام مذاھب و مختلف ذات اور برادریوں کے درمیان اتحاد و اتفاق کے لۓ کوشاں اور سرگرم رہے اور اسى مثبت سوچ کے ساتھ ہندو مسلم ایکتا کے مشن کو لیکر آگے بڑھتے رہے،
آپ بہت باریک بینى سے قومى و ملى مسائل پر گہرى نظر رکھتے تھے،یہى وجہ ہے کہ متنازع موضوع وندے ماترم کے تعلق سے بھى آپکا موقف نہایت صاف،واضح اور سیکولر رہا ہے۔

اسی طرح جناب ڈاکٹر منظور عالم ،جنرل سکریٹری آل انڈیا ملى کونسل نے اپنے دلى رنج و غم کا اظہار کرتے ہوۓ کہا ہے کہ جناب قاضى رشید مسعود ملکى سطح پر ایک بے باک،سلیقہ مند اور ایک مثبت سوچ رکھنے والے سیاسى راہنما تھے ،آپ نے ہمیشہ سیکولرازم کى حفاظت کى اور اسکى روایات اور اقدار کی پاسداری کی ، سیاست میں کٹر پن ،تشدد اور منفى سوچ کے ہمیشہ خلاف رہے ،قاضى جی نے ہمیشہ اتحاد و اتفاق کے دامن کو تھامے رکھا اور آپکى یہ انفرادى خصوصیات ہمیشہ آپکے علیگ ہونے کا پتہ دیتى رہى۔

اس تعزیتى پیغام کو اخبارى نمائندہ تک ارسال کرتے ہوئے مولانا حکیم عبداللہ مغیثی کے فرزند مولانا عبدالمالک مغیثی نے نمائندہ کو بتایا کہ قومى صدر والد ماجد کے جنازے میں شریک نا ہونے کى بناء پر والد ماجد نے قاضى رشید مسعود صاحب کے اہل خانہ سے رابطہ کیا خصوصا انکے بھتیجے عمران مسعود و صاحبز ادہ شادان مسعود سے فون پر اظہار تعزیت کرتے ہوئے صبر جمیل کى تلقین اور بلند درجات کے لۓ دعاء کى۔