سہارنپور عدالت کے حکم سے رہا کیا گئے غیر ملکی تبلیغی جماعت کے افراد وزارت خارجہ حکومت ہند کے دفتر سے اپنے ملکوں کی واپسی کیلئے اجازت کے منتظر

غیر ملکی تبلیغی جماعت کے افراد جو کہ سہارنپور میں قیام پذیر ہیں اور حال ہی میں انکو سہارنپور عدالت نے جیل سے رہا کیا ہے فی الحال وہ تمام حضرات وزارت خارجہ حکومت ہند کے دفتر سے اپنے ملکوں کی واپسی کیلئے اجازت کے منتظر ہیں
انہی حضرات میں دو ساتھی جنکا تعلق ملائشیا سے ہے انکی خبرگیری اور ملاقات کیلئے قومی راجدھانی دہلی میں واقع ملائشیا کے سفارت خانہ سے کونسلر ملائشیا ایمبیسی محمد حافظ بن عثمان واعلی افسر ڈومی محمد اور آشیش ماتھر سہارنپور پہنچے اور اپنے ملکی ساتھیوں سے ملاقات کی اور حال چال دریافت کیا اسکے بعد ضلع سہارنپور کے افسران اکھلیش سنگھ ڈی ایم سہارنپور اور پولیس کپتان ڈاکٹر چنپا سے انکے آفس میں ملاقات کی اور ان حضرات کے بارے میں تفصیل سے معلومات حاصل کیں
مذکورہ افسران نے انکو یقین دہانی کرائی کہ جیسےہی وزارت خارجہ حکومت ہند سے ہمیں انکی واپسی کی اجازت کا حکم موصول ہوگا تو ہم فورا انکی واپسی کیلئے ہر ممکن تعاون کریں گے اور ساتھ ہی ساتھ انہوں نے کہا کہ ان حضرات کی سہارنپور میں اچھے سے دیکھ بھال ہورہی ہے اور انکا ہر طرح خیال رکھا جارہا ہے
افسران نے ان لوگوں کو بتایا کہ ان حضرات کے قیام و طعام کی مکمل ذمہ داری سہارنپور کے مقامی ذمہ داران جنمیں محمد اوصاف گڈو اور انکے رفقاء نے انکی خیر خواہی کا بیڑہ روز اول سے اپنے سر لے رکھا ہے اور انکو کسی بھی طرح کی کوئی پریشانی نہیں ہے
ضلع کے اعلی افسران نے سفارت کاروں کو مزید بتایا کیسے یہ لوگ محض انسانیت کے ناطے بلاکسی طمع کے اتنا بڑا کام انجام دے رہے ہیں اور روز اول سے مقامی انتظامیہ کے رابطہ میں ہیں اور سہارنپور انتظامیہ کو انکا مکمل تعاون حاصل ہے جسکے لئے یہ لوگ قابل مبارکباد ہیں
جن میں ممتاز ایڈوکیٹ چودھری جاں نثار،محمد اوصاف گڈو،مولانا ڈاکٹر عبدالمالک مغیثی ضلع صدر ملی کونسل سھارنپور،انوار احمد ،احمد حسین ،محمد اخلاق وغیرہ شامل ھیں
افسران کے اس اطمینان بخش جواب سے سفارت کار مطمئن نظر آئے اور انہوں نے ان حضرات کے تئیں گہرے تشکر کا اظہار کیا اور کہا کہ جس اخلاص و ہمدردی کے ساتھ اس ٹیم نے یہ کار خیر انجام تک پہنچایا اور تمام غیرملکی تبلیغی جماعت کے افراد کی رہائی کے لئے شب و روز کی جو محنت اور دلی لگن و کوششیں شامل حال رہی ہیں اللہ تعالیٰ ان حضرات کو اسکا بدلہ عطاء فرمائے اور انکی جاں فشانی کو قبولیت سے نوازے