مرادآباد کے عظیم ملی رہنما نسیم احمد ایڈووکیٹ کے انتقال پر مولانا ڈاکٹر عبد المالک مغیثی نے اپنے تعزیتی پیغام

آج جیسے ہی اطلاع ملی کہ مغربی یوپی کے شہر مرادآباد کے عظیم ملی رہنما نسیم احمد ایڈووکیٹ کے انتقال پر ملال کی اطلاع موصول ہوئی تبھی سے ملی حلقوں میں غم کی لہر پھیل گئی ہے اور شہر کے گلی کوچوں میں خاموشی چھا گئی ہے
مولانا ڈاکٹر عبد المالک مغیثی نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہا کہ مرحوم موصوف ایک طویل عرصہ سے مسمانوں کی نمائندہ تنظیم آل انڈیا ملی کونسل سے وابستہ تھے اور سینیر رکن کی حیثیت سے کام کرتے تھے وہ اس وقت بھی مغربی یوپی کے نائب صدر اور مرکزی رکن  کے عہدہ پر قوم و ملت کی خدمات انجام دے رہے تھے
اللہ نے ان کی ذات کو بہت سی خوبیوں سے نوازا تھا اور وہ اپنے آپ میں ایک انجمن تھے انکی ساری زندگی ملی خدمات میں گزری انکے کارنامے قابل قدر اور قابل تحسین ہیں انکا انتقال ملی کونسل کے لئے عظیم خسارہ ہے
انکے غم میں شریک آل انڈیا ملی کونسل یونٹ ضلع و شہر سہارنپور نیز ادارہ جامعہ رحمت گھگرولی میں مرحوم کے لئے ایصال ثواب اور دعاء مغفرت کا اہتمام کیا گیا
مولانا مغیثی ضلع صدر ملی کونسل سہارنپور نے کہا کہ سرزمین ہند علم و عمل علمی اور ملی اور اعلی اخلاق کی حامل شخصیات سے دن بدن خالی ہوتی جارہی ہے جو ہمارے لئے افسوس اور دلی تکلیف کا باعث ہے
اللہ تعالیٰ مرحوم کوآخرت کی تمام عزت و عظمت سے سرفراز فرمائے اور اپنے جوار رحمت میں جگہ عطا فرمائے ملی کونسل یونٹ ضلع و شہر سہارنپور انکے پسمندگان اور جملہ متعلقین کی خدمت میں تعزیت مسنونہ پیش کرتی ہے اور انکے لئے صبر جمیل کی دعا کرتے ہیں