آج کی اہم خبریں : آمنا سامنا میڈیا : ملک میں 85 ہزار کے قریب پہونچی کرونا متاثرین کی تعداد

دنیا بھر میں كورونا وائرس سے تین لاکھ سے زائد افراد ہلاک،متاثرین کی تعداد 44 لاکھ سے متجاوز

آج کی اہم خبریں : آمنا سامنا میڈیا
ملک میں 85 ہزار کے قریب پہونچی کرونا متاثرین کی تعداد
واضح ہوکہ  ملک میں کورونا وائرس کے معاملات تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔  یہاں متاثرہ کوویڈ ۔19 کی مجموعی تعداد 85 ہزار کے قریب ہوگئی ہے۔  اس طرح سے ، متاثرہ افراد کی صورت میں بھارت نے چین کو پیچھے چھوڑ دیا ہے،کورونا وائرس کے انفیکشن کے معاملے میں بھارت اب دنیا میں 11 ویں نمبر پر ہے۔  تاہم ، اس مہلک وائرس سے اموات کی شرح چین کی نسبت بھارت میں بہت کم ہے۔  جبکہ یہ چین میں 5.5 فیصد ہے ، جبکہ یہ ہندوستان میں 3.2 فیصد ہے۔  ملک میں اب تک 27920 مریض اس مرض سے شفایاب ہوچکے ہیں۔  اسی دوران ، بازیابی کی شرح مستقل طور پر بہتر ہوکر 34.06 فیصد ہوگئی ہے۔
_________________________
دنیا بھر میں كورونا وائرس سے تین لاکھ سے زائد افراد ہلاک،متاثرین کی تعداد 44 لاکھ سے متجاوز
واضح ہو کہ عالمی وبا کورونا وائرس کا قہر مسلسل عروج پر ہے اور اب تک تین لاکھ سے زائد افراد اس کے شکار ہو چکے ہیں اور کورونا متاثرین کی تعداد بڑھ کر 44 لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے۔امریکہ کی جان ہاپکنز یونیورسٹی کے سائنس اور انجینئرنگ سینٹر(سي ایس ایس ای )کے اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس کے 1،12،118 کیسز سامنے آئے ہیں اور متاثرین کی مجموعی تعداد 44،27،704 ہوگئی جبکہ 3،01،711 لاکھ افراد اس وبا سے ہلاک ہو چکے ہیں۔
_________________________
الہ آباد ہائی کورٹ نے اذان پر پابندی لگانے کے حکم کو قرار دیا غیر قانونی
واضح ہو کہ یوپی میں لاک ڈاؤن کے دوران مساجد میں لاؤڈ اسپیکر سے اذان دینے پر مقامی انتظامیہ کی طرف سے پابندی لگانے کے معاملے میں الہ آباد ہائی کورٹ نے بڑا فیصلہ دیا ہے۔ہائی کورٹ نے اذان پر پابندی لگائے جانے کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ کے حکم کو منسوخ کر دیا ہے۔اور کہا کہ مسجدوں میں اذان دینے کا معاملہ مذہبی آزادی سے جڑا ہے لہٰذا مسجدوں میں اذان دینے سے کسی کو نہیں روکا جا سکتا۔اور یہ اہم نکتہ بھی واضح کیا ہے کہ مسجدوں میں اذان دینے سے کووڈ۔١۹ کی گائڈ لائن کی خلاف ورزی نہیں ہو رہی ہے۔
_________________________
جمیعۃ علمائے ہند نے جاری کئے اعدادوشمار: 1640غیر ملکی تبلیغیوں میں 64 تھے کوروناپازیٹو صرف 2 کی ہوئی موت
واضح ہوکہ تبلیغی جماعت پر ملک میں کوروناوائرس پھیلانے تنازعہ میں نیا موڑ آگیا ہے۔ جمیعت علمائے ہند مولانا ارشد مدنی گروپ کی جانب سے تبلیغی جماعت کے غیرملکی افراد کے اعدادوشمار جاری کیے گئے ہیں۔ جمیعت علمائے ہند کی طرف سے  جاری کیے گئے اعداد و شمار میں دعوی کیا گیا ہے کہ تبلیغی جماعت پر ملک اور دنیا میں میں کرونا وائرس پھیلانےکا الزام لگایا گیا لیکن ہندوستان میں تبلیغی جماعت سے جڑ ے سولہ سو چالیس غیرملکیوں میں سے سے صرف 64 افراد کو ہی کرونا مثبت پایا گیا، جن میں سے صرف دو کی موت بھی باقی تمام کے تمام منفی ہوگئے اور صحت یاب ہوگئے.
_________________________
امریکی ایجنسی نے ہندوستان سے مسلمان مظاہرین کو رہا کرنے کا مطالبہ کیا
واضح ہوکہ نیوز ادارہ بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق  بین الاقوامی مذہبی آزادی پر نظر رکھنے والی امریکی ایجنسی ، امریکی کمیشن برائے بین الاقوامی مذہبی آزادی نے بھارت سے اپیل کی ہے کہ وہ اس کورونا وائرس کے وبا کے دور میں متنازعہ شہریت میں ترمیم کے قانون کے خلاف احتجاج کرنے والے مسلم مظاہرین کو رہا کرے۔اس نے کہاکہ اس وقت ہندوستان کو چاہئے کہ وہ انہیں رہا کریں ، ان لوگوں کو نشانہ نہیں بنانا چاہئے جو احتجاج کے اپنے جمہوری حق کو استعمال کررہے ہیں۔
_________________________
سڑک و پٹریوں پر چل رہے مہاجر مزدوروں کے معاملے میں سپریم کورٹ کا انکار،ریاستی حکومتیں کارروائی کرے ہم کیسے روک سکتے ہیں
واضح ہو کہ مہاجر مزدوروں کے ریلوے لائنوں اور سڑکوں پر چلنے کے معاملے کی سماعت کے دوران عدالت عظمی نے تارکین وطن مزدوروں کو روکنے اور انہیں شیلٹر ہوم میں رکھنے کی ہدایت کرنے والی درخواست کو مسترد کردیا ہے۔سپریم کورٹ نے کہا کہ اگر لوگ چل رہے ہیں اور نہیں رک رہے ہیں تو ہم اسے کیسے روک سکتے ہیں۔سپریم کورٹ نے کہا کہ ہم آپ کی کس طرح مدد کرسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یہ ریاستی حکومتوں پر منحصر ہے کہ وہ کارروائی کرے۔
_________________________
ملک کے کسی حصے سے اب داخل کرسکتے ہیں درخواست
واضح ہوکہ  اب ملک بھر سے ای فائلنگ کے ذریعے سپریم کورٹ میں درخواستیں دائر کی جائیں گی۔  چیف جسٹس  ایس اے بوبڈے نے آج ملک بھر میں قانونی چارہ جوئی اور وکلاء کے ذریعہ الیکٹرانک طور پر درخواستیں داخل کرنے کی سہولت متعارف کرائی۔  یہ ای فائلنگ 24×7 پر کی جاسکتی ہے۔  عدالت کی فیس آن لائن ادا کی جاسکتی ہے۔  ڈیجیٹل دستخط اس نظام میں استعمال ہوں گے۔  موجودہ نظام کو اب پورے ملک میں توسیع دی جارہی ہے
_________________________
یوگی حکومت کا بڑا فیصلہ ، اب کیمسٹ کو ہر روز بتانا پڑے گا کہ کھانسی ، نزلہ ، بخار کی کتنی دوائیں فروخت ہوئیں
واضح ہو کہ کورونا وائرس کے واقعات میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔ اب اتر پردیش کی یوگی آدتیہ ناتھ حکومت نے اس کے بارے میں ایک اور بڑا قدم اٹھایا ہے۔ یوپی حکومت نے میڈیکل اسٹوروں سے کھانسی ، نزلہ ، بخار یا اس سے ملنے والی علامات سے متعلق دوائیوں کی فروخت کا ریکارڈ رکھنے کو کہا ہے۔ اس کے علاوہ ، ہر روز حکومت کو بتائیں کہ کتنے لوگ ان دوائوں کو خریدنے آئے ہیں۔ میڈیکل اسٹور آپریٹرز کو روزانہ شام 5 بجے تک یہ ریکارڈ مقامی انتظامیہ کو دینا ہوگا۔
_________________________
دہلی میں پھر لرز اٹھی زمین،پیتم پورا میں 2.2 کی شدت کا زلزلہ
واضح ہو کہ قومی دارالحکومت دہلی میں گزشتہ صبح تقریبا ساڑھے 11 بجے زلزلہ کے جھٹکے محسوس کئے گئے۔زلزلہ کا مرکز دہلی کے شمال مغربی علاقے پیتم پورا میں بتایا جارہا ہے۔حالانکہ کم شدت کے زلزلہ کی وجہ سے کسی طرح کے جان ومال کا نقصان نہیں ہوا ہے۔نیشنل سینٹر فار سسمولاجی (NCS) کے مطابق ریختر اسکیل پر اس زلزلہ کی شدت 2.2 کا اندازہ لگایا گیا ہے۔نیوز ایجنسی کے مطابق دہلی میں تقریبا دو مہینوں میں چوتھی بار زلزلہ آیا ہے۔
_________________________
نقل مکانی کرنے والے مزدور ہو رہے پریشان  ہیں ٹرکوں میں سفر کرنے پر مجبور
واضح ہو کہ لاک ڈاؤن کا تیسرا مرحلہ ملک بھر میں جاری ہے۔ لاک ڈاؤن کا سب سے زیادہ اثر روزانہ کمانے والوں پر پڑا ہے ہزاروں افراد پیدل چل کر اپنے گھر کی طرف بڑھ رہے ہیں۔ وہ لوگ جو راستے میں سواری حاصل کرتے ہیں ، پھر اس پر سوار ہوجاتے ہیں دارالحکومت دہلی میں بدر پور بارڈر پر مزدوروں کا ہجوم جمع ہے۔ مظفر نگر میں مزدوروں کے اخراج کے دوران متعدد کارکنوں کی موت ہوچکی ہے۔ اسی دوران ، ایسی تصاویر دارالحکومت دہلی میں بھی سامنے آئیں ، جہاں مزدور ٹرکوں میں سفر کرنے پر مجبور ہیں۔ کارکن کہتے ہیں کہ معاشرتی فاصلہ دیکھیں یا گھر چلے جائیں۔ اگر کوئی بندوبست کیا گیا ہے تو صورتحال کو بہتر بنانا چاہئے۔
_________________________
وزیر خزانہ نرملا سیتارمن نے زراعتی شعبہ کیلئے ایک لاکھ کروڑ روپے کے ایگری انفرا اسٹرکچر فنڈ کا کیا اعلان
واضح ہو کہ مرکزی وزیر خزانہ نرملا سیتارمن نے معاشی پیکج کے تیسری قسط کی تفصیلی جانکاری دیتے ہوئے بتایا کہ فوڈ انٹرپرائزیز مائیکرو سائز کیلئے دس ہزار کروڑ روپے کی اسکیم ہے ۔ تقریبا دو لاکھ مائیکرو یونٹوں کو اس کا فائدہ ملے گا ۔ یہ اسکیم کلسٹر پر مبنی ہوگی ۔ تاکہ وہ گلوبل اسٹینڈرڈ کے پروڈکٹس بنا سکیں ۔ اس میں مقامی کمپنیوں کی مدد کی جائے گی ، جیسے بہار کا مکھانا ، اترپردیش کا آم ، جموں و کشمیر کے کیسری جیسی کھیتی میں کلسٹر بنایا جائے گا ۔وزیر خزانہ نے بتایا کہ زراعت کے شعبہ کیلئے ایک لاکھ کروڑ روپے کا ایگری انفرا اسٹرکچر فنڈ جاری کیا گیا ہے ۔ اسکے علاوہ وزیر خزانہ نے بتایا کہ ڈیری پروسیسنگ میں ذاتی سرمایہ کاری کو بڑھاوا دینے اور کیٹل فیڈ پروڈکشن میں ایکسپورٹ کیلئے 15000 کروڑ روپے کا فنڈ جاری کیا جائے گا ۔
_________________________
416 کورونا متاثر تارکین وطن مزدور پہنچے بہار
 واضح ہو کہ بہار میں کورونا سے متاثرہ تارکین وطن کی کل تعداد 416 ہے یہاں 358 تارکین وطن ہیں جو ٹرین شروع ہونے کے بعد بہار پہنچ چکے ہیں۔ حکومت بہار کے محکمہ صحت نے 4 مئی سے 14 مئی تک مہاجرین کے اعداد و شمار جاری کیے ہیں 14 مئی کی رات تک بہار میں متاثرہ افراد کی کل تعداد 999 تھی۔ تاہم ، 15 مئی کی صبح پانچ نئے مقدمات سامنے آئے ہیں۔ جس کے ساتھ اب کل تعداد 1005 ہوگئی ہے.
_________________________
مہارشٹرا : ممبٸ کے دھراوی میں 84 نۓ کیسز
واضح ہوکہ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ، ممبئی کے دھاروی میں کورونا کے 84 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ۔  اس کے ساتھ ہی یہاں متاثرہ افراد کی تعداد 1145 ہوگئی۔  پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران ، اس وائرس کے انفیکشن کی وجہ سے یہاں کسی کی موت نہیں ہوئی ہے اور ہلاکتوں کی تعداد 53 بتائی گئی ہے.
_________________________
پچھم بنگال کے گورنر پر ٹی ایم سی کے رکن پارلیمنٹ کا طنز،کہا اس عہدے کے لئے آئین کی بنیادی سمجھ ضروری ہے
واضح ہو کہ مغربی بنگال میں ریاستی حکومت اور گورنر کے مابین کشیدگی بدستور جاری ہے۔اس تناؤ کے درمیان حکمران جماعت ترنمول کانگریس کے لوک سبھا ممبر مہوا موئترا نے گورنر جگدیش دھنکر پر طنز کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ملک میں گورنر کے عہدے پر تقرری کے لئے آئین کی بنیادی سمجھ ضروری ہے۔ ٹی ایم سی کے رکن پارلیمنٹ نے ایک ٹویٹ کیا جس میں انہوں نے کہا کہ گورنر کی تقرری کے لئے کچھ تقاضے ہونے چاہیں۔  اپنے ٹویٹ میں ، انہوں نے لکھا مغربی بنگال میں گورنر کا ایک عہدہ خالی ہے.
_________________________
گجرات:وزیر قانون بھوپندر سنگھ چوڑاسمہ کو راحت، سپریم کورٹ نے گجرات ہائی کورٹ کے نااہلی کے فیصلے پر لگائی روک
واضح ہو کہ گجرات کے وزیر قانون بھوپندر سنگھ چوڑاسمہ کو فی الحال سپریم کورٹ سے راحت مل گئی ہے۔سپریم کورٹ نے گجرات ہائی کورٹ کے نااہلی کے فیصلے پر روک لگا دی ہے۔  ہائیکورٹ میں درخواست گزار کانگریسی امیدوار کو نوٹس جاری کرتے ہوئے اس کا جواب طلب کیا ہے۔آپکو بتادیں کہ چوڑاسمہ نے گجرات ہائی کورٹ کے اپنے ایم ایل اے کے انتخاب کو سپریم کورٹ میں منسوخ کرنے کے فیصلے کو چیلنج کیا ہے۔اس معاملے میں ، سپریم کورٹ نے ہائی کورٹ کے فیصلے پر روک لگا دی ہے
_________________________
اعظم گڑھ میں ایک کورونا مشکوک کی موت۔
واضح ہوکہ 13 مئی کو ، ممبئی کا ایک 35 سالہ نوجوان جہان گنج پولیس اسٹیشن کے علاقے سے آیا تھا۔کچھ علامات ظاہر کرنے کے بعد گورنمنٹ میڈیکل کالج اعظم گڑھ میں علاج کے لئے داخل کرایا گیا۔پھرسنگین علامات دکھنے پر اعظم گڑھ سے لکھنئوریفر کردیا گیاجھاں ڈی ایم این پی سنگھ نے کچھ ہی دیربعد موت کی تصدیق کی.
_________________________
روہنگیا کے سب سے بڑے مہاجر کیمپ میں پہنچا کورونا
واضح ہو کہ پوری دنیا میں کورونا وائرس تباہی مچا رہا ہے۔ ادھر دنیا کے سب سے بڑے مہاجر کیمپ میں بھی کورونا وائرس کے انفیکشن کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ کورونا نے بنگلہ دیش میں روہنگیا پناہ گزین کیمپوں میں دستک دی ہے بنگلہ دیش کے مہاجر امدادی کمیشن کے چیئرمین ، محبوب عالم تالقدار نے جمعرات کے روز کہا کہ کورونا کیسز کاکس بازار میں واقع ریفیوجی کیمپ میں رپورٹ ہوئے ہیں۔ مہاجر اور ایک اور شخص کورونا مثبت پایا گیا ہے۔ مثبت پائے جانے کے بعد ، اسے کوارنٹائن کر دیا گیا.
_________________________
کورونا بحران:ورلڈ بینک نے بھارت کے لئے 1 بلین ڈالر کے سماجی تحفظ پیکیج کا کیا اعلان
واضح ہو کہ ورلڈ بینک نے ہندوستان کے لئے 1 ارب ڈالر (7.5 ہزار کروڑ)کے سوشل سیکیورٹی پیکیج کا اعلان کیا ہے۔ جمعہ کو ورلڈ بینک میں ہندوستان کے کنٹری ڈائریکٹر جنید احمد نے یہ اطلاع دی۔  انہوں نے یہ بھی کہا ،معاشرتی دوری کی وجہ سے معیشت نیچے آئی ہے۔حکومت ہند نے غریبوں اور کمزوروں کو تحفظ فراہم کرنے کے لئے غریب بہبود کی اسکیم پر توجہ دی ہے۔اس سے قبل ، ایشین ڈویلپمنٹ بینک (اے ڈی بی) نے بھارت کو کورونا سے مدد کے لئے 1.5 بلین ڈالر کے پیکیج کا اعلان کیا تھا۔  نیو ڈویلپمنٹ بینک نے بھی ہندوستان کو ایک ارب ڈالر کی ہنگامی امداد کا اعلان کیا ہے۔